PFF calls franchise-based PFL ‘illegal’

PFF calls franchise-based PFL ‘illegal’

PFF Press Release, Lahore – May 24, 2024

The Pakistan Football Federation (PFF) has categorically stated that the franchise-based Pakistan Football League (PFL), which is claimed to be held in the next month, is an illegal event as per its statutes and has not been sanctioned by the federation.

The PFF is the sole governing body for football in Pakistan duly affiliated with FIFA and the AFC.

The PFF’s authority is reinforced by the Pakistan Sports Board (PSB) vide its letter dated September 9, 2014, according to which the government only engages with national sports federations recognized by their respective international bodies.

Participating in, organizing, or supporting any football event not sanctioned by the PFF is a clear violation of Article 82 of the PFF constitution and could lead to disciplinary measures.

Furthermore, the PFF emphasized that it encourages any project aimed at genuine football development in the country, provided it is duly approved by the federation.

Urdu version of Press Release as shared by PFF NC

پی ایف ایف نے آئندہ ماہ شیڈول فرنچائز پاکستان فٹبال لیگ کو غیر آئینی قرار دیتے ہوئے کہا ہے کہ فیڈریشن نے اس ایونٹ کی کوئی منظوری نہیں دی۔فیفا اور اے ایف سی کے بینر تلے پی ایف ایف پاکستان میں فٹبال معاملات چلانے کا واحد ذمہ دار ادارہ ہے۔فیفا کی جانب سے دیے جانے والے رائٹس کے تحت تمام تر فٹبال سرگرمیوں، ان کے اوقات اور مقامات کے فیصلوں کی صرف پی ایف ایف مجاز ہے۔

پاکستان سپورٹس بورڈ کے 9ستمبر، 2014کو جاری کردہ احکامات کے مطابق حکومت بھی صرف عالمی باڈیز کے تحت کام کرنے والی فیڈریشنز کو ہی اسپورٹ کرتی ہے۔پی ایف ایف کی منظوری کے بغیر کسی ایونٹ کا انعقاد آئین کے آرٹیکل 82 کی خلاف ورزی ہے جس پر انضباطی کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا۔مزید کہا گیا ہے کہ ملک میں فٹبال کے فروغ میں حقیقی کردار ادا کرنے والے ہر منصوبے کی حوصلہ افزائی کی جائے گی،شرط یہ ہے کہ پہلے اس کی منظوری حاصل کی گئی ہو۔

پی ایف ایف نے فرنچائز پاکستان فٹبال لیگ کو غیر آئینی قرار دیدیا

فیڈریشن نے آئندہ ماہ شیڈول ایونٹ کی منظوری نہیں دی، پی ایف ایف

فیفا اور اے ایف سی کے بینر تلے فٹبال معاملات چلانے کا واحد ذمہ دار ادارہ ہیں، پی ایف ایف

حکومت بھی صرف عالمی باڈیز کے تحت کام کرنے والی فیڈریشنز کو ہی اسپورٹ کرتی ہے

پی ایف ایف کی منظوری کے بغیر کسی ایونٹ کا انعقاد آرٹیکل82کی خلاف ورزی ہے

ذمہ داروں کو انضباطی کارروائی کا سامنا کرنا پڑے گا، پی ایف ایف کا موقف

فٹبال کے فروغ میں حقیقی کردار ادا کرنے والے ہر منصوبے کی حوصلہ افزائی ہوگی،پی ایف ایف

Dawn adds:

The PFF NC’s statement came a day after British newspaper The Sun revealed that Owen will be joined by his former Liverpool and England strike partner Emile Heskey during the launch events in Islamabad, Lahore and Karachi next month.

The PFL has announced Nov 1 as the starting date for its competition. Its claims of partnerships were denied by the English Premier League and its clubs.

The PFL is pointing to last year’s verdict by the European Court of Justice on the breakaway European Super League, which ruled against the principle of the governing bodies restricting a new league, to go ahead with its plans.

Published in Dawn, May 25th, 2024

Leave a Reply